تیرہ سالہ طالبعلم کو ورغلا کر حاملہ ہونیوالی استانی کو اڑھائی سال قید کی سزا

ریڈنگ(جیٹی نیوز) برطانیہ کی اعلیٰ عدالت کراو¿ن کورٹ نے پیر 18 مئی کو 20 سالہ ایک ایسی خاتون کو اڑھائی برس قید کی سزا سنائی جس کا جرم یہ تھا کہ اس نے2017 میں چائلڈ کیئر انسٹیٹیوٹ میں نشے کی حالت میں13 سالہ لڑکے کو نہ صرف جنسی عمل پر مجبور کیا بلکہ اس کے بچے کی ماں بھی بن گئی۔ کمرہ عدالت میں پراسیکیوٹر نے حتمی چالان پیش کرتے ہوئے عدالت کو بتایا کہ ملزمہ نینی نے شادی شدہ ہونے باوجود ایک معصوم 13 سالہ بچے کو اپنی ہوس کا نشانہ بنایا ۔

نینی کے ہاں اولاد نہ تھی اور وہ بچے کی خواہش مند تھی۔ایک شام اس نے انسٹیٹیوٹ میں شراب نوشی کی اور پھر کمرے میں گھس گئی جہاں13 سالہ لڑکا ایکس باکس پر گیم کھیلنے میں مصروف تھا۔نینی نے لڑکے کو بہلا پھسلا کر اس کا ٹراﺅزر اتار دیا اور اس سے جنسی عمل کیلئے بھیک مانگی۔ عدالت کو بتایا گیا کہ نینی مقامی نرسری میں بچوں کی دیکھ بھال اور انہیں تعلیم دیتی تھی،نینی نے شروع میں جرم قبول کرنے کی بجائے معصوم لڑکے پر الزام عائد کیا تھا کہ اس نے زبردستی اسے ریپ کا نشانہ بنایا ۔

تحقیقات میں یہ بات جھوٹ ثابت ہوئی اور انکشاف ہوا کہ نینی نے پانچ مرتبہ 13 سالہ لرکے کو اپنے ساتھ جنسی عمل کیلئے بہلایا پھسلایا۔ پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ نینی کے کے جرم کا انکشاف اس وقت ہوا جب اس کی بچی کا ڈی این اے ٹیسٹ کیا گیا جس سے ثابت ہوا کہ کمسن لڑکا ہی اس کا باپ ہے۔

نینی نے عدالت میں کہا کہ اسے اپنے کئے پر کوئی پچھتاوا نہیں ہے۔متاثرہ لڑکے نے عدالت کو بتایا کہ اس نے ابتک اپنی بیٹی کو نہیں دیکھا ہے اور وہ اتنی آسانی سے اسے اپنی زندگی سے بھلا نہیں سکتا۔مقدمے کے فیصلے کے روز لڑکے نے بتایا کہ نینی اس سے گلے ملی اور اس کا بوسہ لینا شروع کر دیا۔ پتلون کو نیچے کھینچا اور پھر جنسی تعلقات کے بارے میں سوالات پوچھے ۔

لڑکے جورس نے بتایا کہ نینی نے اسے اس کام کے بدلے فش اینڈ چپس خریدنے کیلئے پیسے دئے تھے۔نینی کے سابق شوہر ڈینیئل نے اپنی سابق اہلیہ کے جرم کواپنی بربادی کا نام دیا اور کہا کہ اسے سخت افسوس ہے کہ وہ پیدا ہونیوالی بچی کا باپ نہیں بلکہ ایک 13 سالہ معصوم نوجوان ہے۔

crimnal women jtn1

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.