سماجی فاصلے کا درس دینی والی پولیس اہلکارموج مستی کرتے پکڑی گئیں

گلاسکو(جیٹی نیوز))کرونا لاک ڈاﺅن کے دوران عوام کو سماجی فاصلے کا درس دینے والی لیڈیز پولیس اہلکار وں کی ایک باغ میں بغیر ایس او پیزکے بیئر پینے کی فوٹیج سامنے آنے پر عوام میں غم و غصہ پایا جاتا ہے۔بتایا گیا ہے کہ لیڈیز پولیس اہلکار سال کے سب سے زیادہ گرم دن میں ایک باغیچے میں بیٹھی موج مستی میں مصروف ہیں ۔

اس دوران کسی نے بھی ماسک نہیں پہنا ہوا اور قانون کے رکھوالوں کی جانب سے ہی سماجی فاصلے ایسے احکامات کی کھلی خلاف ورزی بھی کی جا رہی ہے۔سکاٹش افسران ، بائیس سالہ ایملی واٹسن اور 23 سالہ جولی ہینڈ کو دھوپ میں بیٹھے سہیلیوں کے ہمراہ کاک ٹیل پیتے اور موج مستی کرتے دکھایا گیا ہے۔پولیس اہلکار ڈیوٹی سے فارغ ہوتے ہی ایک باغیچے میں بیئر پینے میں مصروف ہیں اور گھاس پر شانہ بہ شانہ بیٹھی دکھائی دے رہی ہیں ۔

گلابی مشروبات کوڈسپوزیبل گلاسوں تھامے چارر دیگر سہیلیوں کیساتھ خوش گپیاں لگائی جا رہی ہیں۔سکاٹش پولیس کی جانب سے درخواست کے بعد اس تصویر کو انسٹاگرام سے ہٹا دیا گیا ہے۔ دلچسپ امر یہ ہے کہ خلاف ورزی کی مرتکب دونوں لیڈیز پولیس اہلکاروں کی ڈیوٹی یہ تھی کہ انہیں عوام میں سماجی فاصلوں اور فیس ماسک کی اہمیت کے بارے میں بتانا ہے اور وہ یہ کام آن ڈیوٹی بخوبی سر انجام دے رہی رہی تھیں لیکن آف ڈیوٹی ہوتے ہی وہ خود ان احکامات کی خلاف ورزی کرتی دکھائی دیتی ہیں۔

سکاٹش پولیس کے چیف انسپکٹر کی جانب سے معاملہ کافی گہرا ہے اور اسے آسانی کیساتھ نظر انداز نہیں کیا جانا چاہئے۔ سکاٹش ٹوری شیڈو جسٹس سکرٹری لیام کیر نے کہا ہے کہ دونوں خواتین پولیس افسران کے لئے یہ قابل قبول نہیں ہے کہ وہ ڈیوٹی کے دوران نافذ ہونے والے قواعد کو آف ڈیوٹی کے دوران توڑیں۔یہ دیکھتے ہوئے بھی کہ پکڑی گئی دونوں پولیس افسران نے حال ہی میں اپنے کیریئر کا آغاز کیا ہے۔
خلاف ورزی

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.