پشتون گھرانے کی پہلی باہمت سائیکلسٹ ثمر خان کی کہانی ان ہی کی زبانی

اسلام آباد (جیٹی نیوز)پاکستانی خاتون سائیکلسٹ ثمر خان نے کہا ہے کہ پشتون گھرانے سے تعلق اور پھر ایسا کھیل جس میں کوئی اورنہ ہو اور نہ ہی مستقبل کا کچھ پتہ ہو، شروع کرنا مشکل تھا۔

والدین کو منانا ، ایڈونچرسپورٹس کی اہمیت بتانا اور درکار فنڈنگ پر راضی کرنا چیلنجزسے کم نہ تھے ، انٹرویو

ایک انٹرویو میں ثمر خان کا مزید کہنا تھا پشتون کلچر میں ایک لڑکی کا گھر والوں کو منانا بھی ایک چیلنج تھا اور پھر بعد میں لوگوں کو ایڈونچر اسپورٹس کی اہمیت بتانا، اس کیلئے درکار فنڈنگ پر راضی کرنا بھی مشکل مرحلہ تھا، تاہم انہوں نے محنت سے سب کچھ ممکن بنایا۔ثمر خان نے کہا انہوں نے ماو¿نٹین بائیک اور ایڈونچرسپورٹس کا انتخاب اسلئے کیا کیونکہ اس کھیل میں ہمیشہ غیر ملکی ایتھلیٹس کے نام لیے جاتے تھے، کوئی پاکستانی ایتھلیٹ کا نام نہیں تھا حالانکہ پاکستان کی جغرافیائی کنڈیشنز میں وہ سب کچھ موجود ہے جو کسی کو بھی ماو¿نٹین بائیکنگ اور ایڈونچر اسپورٹس میں بلندیوں پر لے جانے کیلئے ضروری ہے۔

ثمرخان نے کہاکہ وہ نہ صرف یہ ثابت کرنا چاہتی تھیں کہ پاکستانی خواتین بھی سب کچھ کرسکتی ہیں بلکہ ساتھ ساتھ ملک کی سیاحت کا فروغ بھی انکا ایک ہدف تھا۔ثمر خان کے مطابق جب انہوں نے بیافو گلیشیرپر سائیکلنگ کا عزم کیا تو لوگوں نے ان کا مذاق اڑایا اور کہا یہ ممکن نہیں تاہم انہوں نے ہمت نہیں ہاری اور تین ہفتے کی مہم جوئی کے بعد جس میں ٹریکنگ اور سائیکلنگ دونوں مراحل شامل تھے ، انہوں نے وہ کردیا جو پہلے کسی پاکستانی خاتون نے نہیں کیا تھا،اس کے بعد افریقہ میں ماو¿نٹ کیلی منجرو سر کیا جس میں گھنے جنگلات سے ہوتے ہوئے صحرا اور پھر برفانی چوٹی سب کچھ طے کیا، ان دونوں چوٹیوں کو سرکرنا ثمر کی زندگی تبدیل کرگیا اور انہوں نے زندگی میں خطرات کا سامنا کرنا سیکھ لیا۔

پاکستانی خاتون سائیکلسٹ ثمر خان نے کہا ایڈونچر سپورٹس سے نہ صرف ایک اچھا ایتھلیٹ بنا جاسکتا ہے بلکہ اعتماد میں بھی اضافہ ہوتا ہے، ثمر کی اب خواہش ہے کہ وہ پاکستان میں ایڈونچر سپورٹس کو باقاعدہ قومی سطح پر متعارف کرائیں اور اس کی باضابطہ فیڈریشن ہو جو ماو¿نٹین بائیکنگ اور اسنو بورڈنگ جیسے کھیلوں میں ایتھلیٹس کو آگے بڑھائیں۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.